645

دھرنے والوں کیلئے بڑا دھرنا تیار۔۔۔ تحریک انصاف کی حکومت کو اپنوں نے ہی بڑا سرپرائز دے ڈالا

پشاور(ویب ڈیسک) پشاور میں صوبائی حکومت کے بی آر ٹی منصوبے نے شہریوں کا پارا چڑھا دیا۔ تاجر اور مختلف سیاسی جماعتوں کے رہنما سڑکوں پر نکل آئے۔ منصوبے میں تاخیر کے خلاف اور درپیش مسائل کے حوالے سے کار ریلی نکالی اور حکومت کے خلاف نعرے لگائے، پشاور میں مقامی قومی جرگے

کی جانب سے بی آر ٹی منصوبے میں تاخیر کے خلاف یونیورسٹی روڈ پر کار ریلی نکالی گئی۔ مظاہرین نے بی آر ٹی منصوبے اور حکومت کے خلاف نعرے لگائے،ریلی میں مختلف سیاسی جماعتوں کے مقامی رہنمائوں سمیت تاجروں نے شرکت کی۔ شرکا کا کہنا تھا کہ بی آر ٹی منصوبے سے کاروبار کو نقصان پہنچا جبکہ تاخیر کے باعث مسائل میں مزید اضافہ ہو رہا ہے، قومی جرگے کی ریلی میں شریک تاجروں نے حکومتی ٹیکسوں کو بھی مسترد کر دیا۔ ریلی چیمبر کے پاس پہنچ کر اختتام پذیر ہوئی، دوسری جانب خبر یہ ہے کہ ایف اے ٹی ایف کے ایشیا پیسفک گروپ سے مذاکرات کے دوسرے دن پاکستان کے حوالے سے جائزہ رپورٹ پر تبادلہ خیال کیا گیا، ذرائع کے مطابق دوسرے دن ہونے والے اجلاس میں پاکستان کے لیے 40 تجاویز میں سے 9 کا جائزہ لیا گیا۔ ایشیا پیسفک رپورٹ پر موثر دفاع کرتے ہوئے، وزارت خزانہ نے منی لانڈرنگ کے لیے قوانین اور ریگولیشنز پر بریفنگ دی، دنیا نیوز ذرائع کے مطابق پاکستانی حکام نے اجلاس میں یقین دہانی کرائی کہ غیر منافع بخش اداروں کی ٹرانزیکشن کا ریکارڈ رکھا جائے گا جبکہ غیر منافع بخش اداروں کی ریگولیشنرز بہتر بنائی گئی ہیں، اجلاس میں ایف اے ٹی ایف حکام کو مالیاتی اداروں کے اہداف سے آگاہ کیا گیا جبکہ مشکوک ٹرانزیکشن اور جعلی اکاؤنٹس کے خلاف کاروائیوں پر بھی بریفنگ دی گئی، پاکستانی حکام نے بتایا کہ مالیاتی اداروں کی تمام ٹرانزیکشن مانیٹر کی جا رہی ہیں۔ انہوں نے مشکوک فرم اور ٹرسٹ کی رجسٹریشن روکنے کے لیے اقدامات کی یقین دہانی بھی کرائی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں