133

فیض احمد فیض کی زندگی کا ایک ایسا واقعہ جس سے بہت کم لوگ واقف ہوں گے،آپ بھی پڑھئیے

فیض کالج کے زمانے سے سگریٹ نوشی کرتے تھے، اور خوب کرتے تھے۔ ایک مرتبہ ان کے استاد صوفی غلام مصطفیٰ تبسم امتحان ہال کے نگران تھے۔ کیا دیکھتے ہیں کہ فیض سوالنامہ اور جواب نامہ کے کاغذات سامنے رکھ کر خاموش، دور دیکھ رہے ہیں۔ ان کے ہاتھ میں قلم نہیں

ہے۔صوفی صاحب نے قریب آ کر پوچھا کہ تم پرچہ حل کیوں نہیں کر رہے ہو؟ فیض نے صوفی صاحب کی طرف ملتجی نظروں سے دیکھا اور پوچھا: کیا میں سگریٹ پی سکتا ہوں۔صوفی صاحب کو جیسے کرنٹ لگا ہو۔ آج تک کسی طالب علم نے امتحان ہال میں ایسا سوال نہیں پوچھا تھا۔ وہ فیض کو گھورتے ہوئے خاموش پیچھے ہٹے۔ کاریڈور میں پطرس بخاری پرنسپل نمودار ہوئے۔ انہوں نے بخاری صاحب کو فیض کی طلب بیان کی، اور دریافت کیا کہ ایسے میں وہ کیا کریں۔ بخاری صاحب نے کہا: پینے دو. فیض نے سگریٹ سلگا کر دھواں دار کش لگایا، اور امتحان ہال کی نئی تاریخ لکھ ڈالی

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں